» » At least 52 killed in huge blast in Lasbella’s Shah Noorani shrine

بلوچستان ایک بار پھر خون آلود، دربار پر حملے میں 52 افراد جان بحق اور 100 سے زائد زخمی
حب (ویب ڈیسک) بلوجستان کے علاقے حب کے قریب واقع درگاہ شاہ نورانی میں دھماکے کے نتیجے میں خواتین اور بچوں سمیت 50 افراد جاں بحق اور 100 سے زائد زخمی ہوگئے ہیں زخمیوں میں بعض کی بھی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے۔
زرائع ابلاع کے مطابق بلوچستان کے علاقے حب میں واقع درگاہ شاہ نورانی میں زائرین کی بڑی تعداد موجود تھی ج دوران زور دار دھماکا ہوا دھماکے کے نتیجے 52 افراد جاں بحق ہوگئے ہیں اور 100 سے زائد زخمی ہیں، زخمیوں میں بعض کی حالت تشویشناک ہے۔ درگاہ شاہ نورانی میں سالانہ میلہ جاری ہورہا تھا اس دوران مزار کے احاطے میں دھمال کے دوران دھماکا ہوا ، دھماکے کے فوری بعد ریسکیو اہلکارموقع پر پہنچ کر امدادی کارروائیاں شروع کردیں اور زخمی و جاں بحق افراد کو قریبی اسپتال منتقل کیا ۔ انچارج ایدھی لسبیلہ حلیم لاسی نے دھما کے کے نتیجے میں 50 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کردی ہے جب کہ دھماکے میں 100 سے زائد افراد زخمی ہیں، دھماکے میں جاں بحق و زخمی ہونے والوں میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔
دھماکے کے بعد مزار میں افراتفری مچ گئی اور بھگدڑسے بھی کئی افراد زخمی ہوگئے اور ہلاک ہگئے، دھماکے کے فوری بعد ضلع بھر کے تمام اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی اور دیگر شہروں سے ڈاکٹرز اور ایمبولینسز کو بھی طلب کیا گیا ہے۔ درگاہ شاہ نورانی میں دھمال کے وقت دھماکے کے باعث ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے۔
آئی ایس پی آر کے مطابق کراچی میں پاک آرمی کے تمام اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے، 50 فوجی اور 2 میڈیکل ٹیمیں جائے وقوعہ پر پہنچ چکی ہیں، آئی ایس پی آر کے مطابق علاقے سے جہاز کےذریعے زخمیوں کا انخلا ممکن نہیں تاہم ہیلی کے ذریعے امدادی کاموں کی کوشش کی جائے گی۔ پاک فوج کے ترجمان کے مطابق آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے بھی زخمیوں کو بہترین طبی سہولیات فراہم کرنے کی ہدایت دیتے ہوئے کہا ہے کہ زخمیوں کو نکالنے کے لیے تمام وسائل استعمال کیے جائیں اور معمولی زخمیوں کو موقع پر ہی طبی امداد یقینی بنائی جائے۔
صدر ممنون حسین اور وزیراعظم نوازشریف نے دھماکے کی شدید مذمت کی ہے اور کہا ہے جاں بحق و زخمی ہونے والوں کے لواحقین سے ہمدردی دلی ہمدردی ہے۔ وزیراعظم نے مذمتی بیان میں کہا ہے کہ دھماکے کے ذمہ داروں کو کٹہرے میں لایا جائے۔
ذرائع کے مطابق دھماکے میں جاں بحق ہونے والے زیادہ تر افراد کرچی سے گئے تھے، کراچی کے علاقوں گھاس منڈی اور کورنگی سے زائرین کی بڑی تعداد نورانی درگاہ گئی ہوئی تھی جن کا دھماکے کے بعد کوئی پتا نہیں چل رہا ہے۔ گھاس منڈی سے نورانی جانے والوں کے عزیز و اقارب نے میڈیا کو بتایا کہ ان کے خاندان کے 42 افراد درگاہ نورانی زیارت کے لیے گئے ہوئے تھے جن سے دھماکے کے بعد کوئی رابطہ نہیں ہو پارہا ہے۔ اور زیارت کے لیے جانے والوں میں 10 خواتین، 8 بچے اور 15 سے 20 مرد شامل ہیں۔


via Geo TV.

HUB: At least 52 people including women and children were killed and more than 100 have been injured in a huge blast in Shah Noorani shrine near Hub in Balochistan’s Lasbella district on Saturday evening, rescue sources told Geo News.

Balochistan Home Minister Mir Sarfaraz Bugti said that the explosion took place when the devotees were engaged in dhamaal.

He said ambulances and rescue teams from Lasbela and Hub rushed to Shah Noorani, located about 200km away from of Karachi.

"It takes some three hours from Hub to reach the Shah Noorani shrine which is located in difficult mountainous area where mobile phone service also does not work", he added.

He said helicopter ambulance could not be used because of darkness.

In-charge Edhi Foundation Lasbella Hakeem Lassi told Geo News that more than 100 people have also been injured.

He said that injured were being shifted to a hospital for medical treatment.

Lassi said that more than 10 ambulances of Edhi foundation have reached the blast site and rescue efforts were underway.

Director-General Inter Services Public Relation Lt Gen Asim Saleem Bajwa on Twitter said that Chief of Army Staff General Raheel Sharif has ordered maximum assistance for evacuation and on-spot medical treatment of the injured.

He said that medical teams from Karachi and Khuzdar were reaching the blast site.

Talking to Geo News, Additional Deputy Commissioner Lasbella Tariq Mengal said that 500 to 600 people were in the shrine at the time of blast.

Mengal said that many people on Saturdays and Sundays arrive in the shrine to participate in the dhamaal, a traditional folk dance.

He said that the authorities were trying to shift the injured to Karachi for medical treatment.

Rescue teams and law enforcers are facing difficulty in reaching the site of the blast as it is located in province's remote area.

"Every day, around sunset, there is a dhamaal here, and there are large numbers of people who come for this", said Nawaz Ali, the shrine's custodian.

No group has taken responsibility of the blast so far.



About Admin

Hi there! I am the admin of this page, am not the author of the post. I am pleased to share this news with you; you can express your expression as comment in below comment area….this news’ copy right is reserved by the author/publisher mentioned there. Thanks
«
Next
Newer Post
»
Previous
Older Post

No comments:

Leave a Reply


فریش فریش خبرین اور ویڈیوز


Random Posts

Loading...